_93112999_gettyimages-630460356 585

’دونوں سرحدوں پر شرپسندوں نے تکلیف دی ہوئی ہے

پاکستان پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری نے کہا ہے کہ وہ جب بھی ملک سے باہر گئے ہیں سیاسی اداکار کہتے ہیں کہ میں بھاک گیا ان کے دماغوں کا یہ فتور انھیں سمجھ میں نہیں آتا حالانکہ ہماری لاشیں بھی یہاں دفن ہوں گی۔
دبی سے ایک چارٹرڈ طیارے کے ذریعے جمعے کو کراچی پہنچنے کے بعد کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے سابق صدر آصف علی زرداری کا کہنا تھا کہ وہ کیسے پاکستان کے عوام ، مزدوروں اور ہاریوں کو اکیلا چھوڑ دیں تاکہ ایک سرمایہ دار خاندان ان پر ظلم کرے۔ ’ہم انھیں روکیں گے اور عوام کی طاقت سے روکیں گے۔‘
ڈیڑھ سال کے بعد یہ کارکن اپنے شریک چیئرمین کو سننے کے لیے جمع ہوئے تھے لیکن آصف علی زرداری نے اپنے خطاب میں آنے والے وقت کے لیے کسی واضح حکمت عملی کا اظہار نہیں کیا۔
آصف علی زرداری کا کہنا تھا کہ پیپلز پارٹی جمہوریت کو پرواں چڑھائے گی کیونکہ ’جمہوریت ہی سب سے بڑا انتقام ہے، ماضی میں اس وقت کی طاقتوں نے پی پی پی کو اٹھنے سے روکا مخالفت کی اپنی پسند کے حلقے بنائے اس کے باوجود ہم لڑے اور اپنی حکومت بنائی اور مدت پوری کی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں