902

ایم پی اے فضل حکیم نے کیا نہیں کیا

ایم پی اے فضل حکیم کی کوششوں سے مینگورہ شہر میں لو پریشر کا مسئلہ کافی حد تک کم ،ایک مہینہ بعد گھریلو صارفین نے سوئی گیس دیکھ لیا ،گزشتہ روز ممبر صوبائی اسمبلی اور ڈیڈک کمیٹی کے چیر مین فضل حکیم خان نے جی ایم سوئی گیس کو فون کرکے سوات کے سوئی گیس صارفین کے مسائل سے اگاہ کیا اور کہا کہ سوات کے عوام صوبہ بھر میں ایبٹ آباد کے بعد زیادہ بل جمع کرنے والے ہیں لیکن اسکے باوجود ان پر ظالمانہ لوڈشیڈنگ کا سلسلہ جاری ہے اور لوپریشر کے وجہ سے عوام کو شدید مشکلات کا بھی سامنا ہے جس پر فوری طور پر انہوں نے لو پریشر ختم کرنے کے احکامات جاری کر دئے اور مینگورہ شہر میں گیس کے مسئلے میں کمی ائی اس موقع پر فضل حکیم نے میڈیا کو بتایا کہ مینگورہ شہر میں گیس لوڈشیڈنگ اور لو پریشر کے وجہ سے گھریلو صارفین کو گیس نہیں مل رہا تھا جس پر ہم نے سی این جی سٹیشن بند کردئے اور سٹیشن مالکان کو کروڑوں روپے کا نقصان اس وجہ سے بوجھ ڈالا ہے کہ گھریلو صارفین کو گیس مل سکیں لیکن اسکے باوجود یہ نہایت ظلم ہے جس کیلئے ہر فورم پر اواز اٹھایا جائیگا انہوں نے کہا کہ اس سلسلے میں گزشتہ رو ز اسمبلی فلور پر بھی اواز اٹھائی تھی میں عوام کا خادم ہوں اور عوام کی فلاح و بہبود کیلئے کسی بھی قربانی سے دریغ نہیں کرونگا انہوں نے کہا کہ میں اپنے قوم سے مخلص ہوں اور انکے لئے ہر وقت حاضر ہوں انہوں نے کہا کہ سوات کیلئے 120 پریشر کے بجائے صرف 40.50 پریشر دنیا زیادتی ہے اس سلسلے میں مذید اگے بھی بات کرونگا ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں