886

جمیعت طلباءاسلام پاکستان کے تعلیمی اداروں سے کلاشنکوف کلچر کے خاتمے اور طلباءکی سیاسی تربیت کیلئے جدوجہد کررہی ہے۔حافظ بختی روان لودہی

جمیعت طلباءاسلام کے صوبائی صدر قاری عدنان نے کہاہے کہ جمیعت طلباءاسلام پاکستان کے تعلیمی اداروں سے کلاشنکوف کلچر کے خاتمے اور طلباءکی سیاسی تربیت کیلئے جدوجہد کررہی ہے ،اس وقت عالمی ایجنڈے کے تحت مدارس کو بدنام کرنے کی سازش کی جارہی ہے جس کے مقابلے کیلئے پاکستان کے نوجوانوں کو جمیعت طلبا ءاسلام کے قافلے میں شامل ہونا ہوگا،جمیعت طلباءاسلام مخلوط نظام تعلیم کے خلاف جدوجہد کررہی ہے او ر انشاءاللہ اس جدوجہد کو جاری رکھا جائےگا،فرنگی سامراج کے پیدا کردہ فرق جسے مسٹراور ملا کا نام دیا گیا ہے جس کے خاتمے کیلئے جے ٹی ائی کے نوجوان میدان عمل میں ہے ان خیالات کا اظہار انہوںنے گزشتہ روز دورہ سوات کے موقع پر صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے کیا اس موقع پر جمیعت طلباءاسلام کے صوبائی رہنماءحافظ بختی روان لودہی اوردیگر بھی انکے ہمراہ تھے ،قاری عدنان نے کہاکہ اس وقت دنیا بھر میں مسلمانوں کو ظلم وبربریت کا نشانہ بنایا جارہاہے شام ،برما ،کشمیر اور فلسطین سمیت مسلم ممالک میں معصوم بچوں اور خواتین پر مظالم کے پہاڑ گرائے جارہے ہیں انہوںنے کہاکہ برمااور شام سمیت ظلم اور بربریت کانشانہ بننے والے مسلمانوں کے اظہار یکجہتی کرتے ہیں اور حکومت پاکستان سے مطالبہ کرتے ہیں کہ وہ پاکستا ن میں ایرانی سفارتخانے کو بند کرکے ایرانی سفیر کو ملک بدر کرے انہوںنے کہاکہ اتنے مظالم پر غیراسلامی ممالک کی خاموشی تو ایک طرف لیکن او ائی سی ممالک کی خاموشی بڑاسوالیہ نشان ہے انہوںنے مزید کہاکہ جمیعت طلباءاسلام کے زیر اہتمام 5جنوری 2017 کو صوبائی مجلس عمومی اور 6جنوری کو جے ٹی ائی تربیتی کنونشن کا انعقاد کررہی ہے اسکے علاوہ جمیعت طلباءاسلام یکم مارچ کو جمیعت طلباءا سلام صوبہ خیبر پختونخواہ کے جانب سے صدسالہ تقریبات کے حوالے پشاور تا نوشہرہ ریلی کا انعقاد کیا جائے گا جبکہ صدسالہ تقریبات کے موقع پر جمیعت طلباءاسلام کے لاکھوں طلباءشرکت کریں صد سالہ تقریبا ت میں جمیعت علماءاسلام صوبہ خیبر پختونخواہ کے امیر مولانا گل نصیب خان ،جمیعت علماءاسلام ریاست امریکہ کے صدر وسابق ایم این اے قاضی فضل اللہ ایڈوکیٹ ،سینیٹر حافظ حمداللہ ،مولانا عبدالماجد حقانی (ساہیوال)اور جمیعت طلباءاسلام کے مرکزی و صوبائی قائدین بھی شرکت کریںگے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں