843

حلقہ بندیوں میں تحصیل بریکوٹ کو الگ صوبائی حلقہ دیا جائ

بریکوٹ(رپورٹ : ظاہر شاہ کمال ) حلقہ بندیوں میں تحصیل بریکوٹ کو الگ صوبائی حلقہ دیا جائے ‘ سوئی گیس کے ڈسٹری بیوشن پائپ لائن کی کمی فور ی طور پر پورا کیا جائے ‘ سوئی گیس کے میٹرز کی فراہمی میں تاخیر مزید برداشت نہیں کی جائیگی ‘ میڑوں کی تقسیم کو سیاسی بنیادوں پر نہ کیا جائے ‘ گرڈ اسٹیشن بریکوٹ میں شموزئی اور کوٹہ فیڈروں کو فوری طور پر چالو کیا جائے ‘ اور مزید تاخیر ی حربے استعمال نہ کیا جائے ‘ ان خیالات کا اظہا ر قومی جرگہ تحصیل بریکو ٹ کے صدر صدیق علی خان ، جنر ل سیکرٹری فضل منان خان ،فدا محمد خان ، انجینئر شرافت علی خان ، سجا د خان پارڑئی ،بخت جمیل خان ، رب نواز خان ، ظاہر شاہ خان ، وحید کرم ، شہزادہ باچا ، امیر زیب خان ، اقبال خان دولت خیل ،عالم زیب خان، حسن خان و دیگر نے ”آزادی فورم “ میں اظہار خیال کرتے ہوئے کیا ‘ انہوں نے کہا کہ ائندہ عا م انتخابا ت میں حلقہ بندیوں میں تحصیل بریکوٹ کو الگ صوبائی حلقہ دیا جائے اگر تحصیل بریکوٹ رقبے کے لحاظ سے کم ہو تو تندوڈاگ سے لیکر بلوگرام تک کے علاقے بھی اس حلقے کے ساتھ شامل کیا جائے ‘ انہوں نے کہا کہ تحصیل بریکوٹ میں جن علاقوں میں سوئی گیس کے پائپ لائن بچھائے گئے ہیں ان علاقوں کو جلد از جلد سوئی گیس کے فراہمی یقینی بنایا جائے ‘ اور جن علاقوں میں پائپ لائن نہیں بچھایا گیا ہو ان علاقوں کو جلد از جلد پائپ بچھایا جائے تاکہ تحصیل بریکوٹ کے عوام سوئی گیس کے نعمت سے مستفید ہوسکے ‘انہوں نے کہا کہ سوئی گیس کے میڑوں کی تقسیم اب سیاست کی نظر ہوگئی ہے غریب عوام کو سوئی گیس کے میڑز ملنا اب خواب بن گیا ہے لہذا سوئی گیس میڑوں میں سیاست ختم کی جائے اور تمام لوگوں کو یکساں میڑوں کی فراہمی کی جائے‘ گرڈ اسٹیشن بریکوٹ کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ بریکوٹ گرڈ اسٹیشن میں دو خالی فیڈروں یعنی شموزئی اور کوٹہ فیڈروں کو جلد ا ز جلد چالو کیا جائے تاکہ کوٹہ اور شموزئی کے عوام کو بجلی کے درپیش مسائل ختم ہوجائے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں