265

سعودی پلٹ شخص کواپنے چچا نے قتل کردیا

سوات کے علاقے قلاگے سے لاپتہ ہونے والے سعودی پلٹ شخص کے قتل کا ڈراپ سین ہوگیا،مقتول کو اپنے بھتیجے نے اجرتی کی مدد سے پہاڑی پر لے جاکرقتل کیا اور گھڑے میں دفن کردیا تھا،ایک ملزم کو گرفتار کرلیا گیا،مقتول کی بیوی نے اغواء کا مقدمہ درج کرادیا،پولیس کی تفتیشی ٹیم نے مشکوک شخص کو گرفتار کیا جس نے راز اگل دیا،پولیس ترجمان کے مطابق صالح رحمن سعودی عرب سے واپس آنے کے بعد 16اگست 2020کو مینگورہ جاکر لاپتہ ہوگیا تھا،اس کی بیوی مسماۃ نظیرہ نے ملزمان عمررحمن،بارحمن،سعیدخان اور سید نواب پراغوا کا مقدمہ درج کرایا،ڈی آئی جی عبدالغفورآفریدی نے ڈی ایس پی فاروق جان کی سربراہی میں کمیٹی تشکیل دی جس پر کمیٹی نے ایک مشکوک شخص بختورخان ولدگل نواب سکنہ کانجو کو گرفتار کیا جس نے انکشاف کیا اس نے ملزم تعزیررحمن کے ساتھ مل کر اس کے چچا صالح رحمن کو نوادرات کی تلاش کے بہانے گیراسر پر لے جاکر قتل کیاپولیس کے مطابق پولیس نے ملزم کی نشاندہی پر مجسٹریٹ اور میڈیکل ٹیم کی موجودگی میں قبرکشائی کی اور بوسیدہ لاش کو برآمد کرکے ورثاء کے حوالے کردی گئی۔گرفتار اجرتی ملزم بختورجان سے مزید انکشافات کی توقع ہے،ڈی آئی جی ملاکنڈ ڈویژن عبدالغفورآفریدی نے پولیس افسران کو تعریفی اسناد سے نوازا اورکہاکہ اس کیس میں غفلت برتنے والے اہلکاروں کے خلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائے گی

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں