986

مجھے میرا اراضی حوالہ کرکے انصاف فراہم کیا جائے ، با اثر افراد عدالتی احکامات نہیں مانتے.. تاثیر جان ولد تور محمد خان

تحصیل کبل کے علاقہ سیگرام سے تعلق رکھنے والے تاثیر جان ولد تور محمد خان نے کہا کہ مجھے میرا اراضی حوالہ کرکے انصاف فراہم کیا جائے ، با اثر افراد عدالتی احکامات نہیں مانتے ، عدالت کی طرف سے میرے حق میں فیصلہ ہونے کے باجود میرا اراضی فروخت کیا گیا ہے میں نے انصاف کیلئے عدالت کا دروازہ کھٹکٹا یا اور جب عدالت نے انصاف پر مبنی فیصلہ کیا تو متعلقہ حکام اور بااثر افراد اس فیصلہ کو ماننے سے انکاری ہے ، میرے بھائی شاد محمد نے میرا زمین فروخت کردیا ہے اور مجھے اپنے حق محروم رکھا جارہا ہے ، سوات پریس کلب میں اپنے چچا محمود کے ساتھ پریس کانفرنس کرتے ہوئے تاثیر جان نے کہا کہ سیگرام میں میرا اراضی میرے بھائی شاد محمد نے رضا خان نام شخص پر فروخت کیا ہے جس کے خلاف ہم نے قانونی راستہ اختیار کرتے ہوئے عدالت میں کیس دائر کیا ، سیشن جج کے عدالت میں ہمارے حق میں فیصلہ بھی ہوچکا ہے اس حوالے سے عدالت نے زمین کے خرید و فروخت پر حکم امتناعی بھی جاری کیا ہے لیکن ا س کے باوجود عدالتی احکامات پر عمل درامد کی بغیر میری اراضی کا انتقال کسی اور کے نام ہوگیا ہے ، جبکہ مزید اراضی بھی خریدار کے نام رجسٹرڈ کردیا ہے ، انہوں نے کہا کہ اس حوالے سے ہم نے کمشنر ملاکنڈ ڈویژن کو درخواست بھی دیا ہے تاکہ قانون کے تقاضے پورے کئے جاسکے ، لیکن یہاں قانون کو ماننے کیلئے قانون کے رکھ والے ہی انکاری ہے اور تحصیل کبل سے تعلق رکھنے والے ایک تحصیل دار جن کا اب تبادلہ ہوچکا ہے ہمارے اراضی کو عدالتی حکم کے باجود خریدار کے نام انتقال کردیا ہے ، انہوں نے کہا کہ کمشنر کے طرف سے اے سی کبل کوہمارا درخواست انکوائری کیلئے بھجوایا گیا لیکن انہوں نے بھی اس حوالے سے اپنے فرائض پوری نہیں کئے ، انہوں نے کہا کہ ہم ذمہ داروں سے ہمدردانہ اپیل کرتے ہیں کہ ہمیں ہمارا حق دیا جائے اور اس حوالے سے انصاف کے تقاضے پوری کرتے ہوئے ان سرکاری لوگوں کے خلاف کاروائی کی جائیں جنہوں نے میرا حق کسی اور کو دینے میں کردار ادا کیا ہے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں