933

ملاکنڈڈویژن میں یوٹیلٹی سٹورز رمضان المبارک کے آٹا پیکج دینے میں مکمل طور پر ناکام ہوگئے

بریکوٹ( ظاہر شاہ کمال)ملاکنڈڈویژن میں یوٹیلٹی سٹورز رمضان المبارک کے آٹا پیکج دینے میں مکمل طور پر ناکام ہوگئے ۔ ابھی تک پورے ملاکنڈ ڈویژن کے کسی بھی یوٹیلٹی سٹور میں آٹا دستیاب نہیں ہے ۔مختلف آٹے ملوں کا یوٹیلٹی سٹورز 2کروڑ 62لاکھ روپے مقروض ہیں جس کی وجہ سے ملوں نے یوٹیلٹی سٹور وں پر آٹے کی فراہمی بند کردی ہے ۔ہیڈ آفس اسلام آباد ادائیگی کے مختلف تاریخ بتا رہے ہیں مگر ابھی تک رقم کی ادائیگی ممکن نہ ہوسکی ۔عوامی حلقوں کا کہناہے نکہ یوٹیلٹی سٹورز ریلیف دینے کے نام پر عوام سے دھوکہ کررہے ہیں ۔رمضان المبارک کا مقد س مہینہ شروع ہوچکاہے یوٹیلٹی سٹوروالوں نے کسی بھی اشیاء خوردنوش پر کوئی ریلیف نہیں دیا جن سامان پر ریلیف نہیں ہے وہ یوٹیلٹی سٹوروں میں وافر مقدار میں موجود ہے ۔حکومت فوری طور پر یوٹیلٹی سٹوروں پر عوام کو ریلیف دیں تاکہ یوٹیلٹی سٹورز جن مقاصد کے لئے بنائے گئے ہیں وہ مقاصد پورے ہوسکیں ۔تفصیلات کے مطابق رمضان المبارک کے مقد س مہینے کے پیش نظر وفاقی حکومت نے یوٹیلٹی سٹورز پر آٹے پر پیکج کا اعلان کردیا تھا ۔20کلو آٹے کا تھیلا عام مارکیٹ میں 720روپے میں فروخت ہورہاہے جبکہ یہی تھیلا یوٹیلٹی سٹور میں 635روپے میں عام آدمی کو ملتا تھا مگر بدقسمتی سے ملاکنڈ ڈویژن کے 93یوٹیلٹی سٹور ز میں کہیں بھی آٹا نہیں مل رہاہے ۔اس بارے میں ریجنل منیجر خالد اکبر ترکئی سے رابطہ کرنے پر کہاکہ ہمیں دس ہزار تھیلوں کا کوٹہ مل چکاہے اور باقی دس ہزار تھیلوں کا کوٹہ بھی جلد مل جائے گا مگر ملاکنڈ ڈویژن کے آٹے کے ملوں کا یوٹیلٹی سٹورز پر آٹے کی مد میں 2کروڑ 62لاکھ روپے مقروض ہے جس کی وجہ سے ملوں کے مالکان نے احتجاجاً یوٹیلٹی سٹورز پر آٹے کی فراہمی بند کردی ہے ۔اس بندش کی وجہ سے ہم عوام کو آٹا پیکج دینے میں ناکام رہے ہیں ۔ہیڈآفس والوں نے یقین دھانی کرائی ہے کہ جلد ملوں کو ادائیگی کردیں گے اور عوام آٹا پیکج سے مستفید ہوجائیں گے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں