1,026

موجودہ حکومت اور دیگر پارٹےاں اُس وقت کہا تھے جب سوات میں بے گناہ لو گوں کو ذبح کیا جا رہا تھا.وقار احمد خان

موجودہ حکومت اور دیگر پارٹیاں اُس وقت کہا تھے جب سوات میں بے گناہ لو گوں کو ذبح کیا جا رہا تھاPK-82کے عوام کے لئے اگر ہمارے خون کی بھی ضرورت پیش آجائے تو بھی دریغ نہیں کرینگے تبدیلی کے دعویداروں نے نو جوان نسل کو نا چ گا نوں میں مصروف رکھ کر تعلیم سے محروم کرنے کی کوشش کی جارہی ہے ہمارے دور حکومت میں منظورشدہ منصوبوں پر اپنے نام کے تختیاں لگا کر مقامی لوگوں کو نوکر ی دینے کے بجائے حق تلفی کر رہے ہیں ہم گا لی گلوچ کے سیاست نہیں بلکہ عدم تشدد کے پالیسی پر عمل پیرا ہے عدالت پر بھر پور اعتماد ہے وہاں جا کر مخالفین کو قانونی شکست دینگے کا لا کلے تا شا ہ ڈھیرئی سڑک جو ہماری دور حکومت میں فنڈز منظور ہو چکے تھے اب تک تعمیر کیوں نہیں کیا جا رہا ہے UCٹال میں منظور شدہ کا لج اور دیگر ترقیا تی سکیم دوسرے حلقے کیوں منتقل ہوئی ہے PK-82کے عوام کو مزید مسائل و مشکلات دھکیل دیا ہے ان خیا لا ت کا اظہار سا بق ممبر صوبائی اسمبلی وقار احمد خان ، ضلعی رہنما ابراہیم دیولئی ، ذہین خان ،عبد المالک ، آفرین خان ، سلطان علی خان ، ملک احمد ، عبد الحمید خان ، شیر احمد ، خان زیب ، ڈاکٹر فضل غنی اور دیگر نے گذشتہ روز مانڑئی میں ایک شمولیتی تقریب سے خطاب کے دوران کیا انہوں نے کہا کہ ملک میں جب دہشت گردی اور بارود کا راج تھا تو پنجاب کے سیاست کر نے والے خا موش بنے بیٹھے تھے ANPنے قربانیوں کے بدولت امن قائم کرنے میں بھر پور کردار ادا کیا تبدیلی کے نعرے لگانے والوں نے تو نیا پاکستان بنا نا تو دور کے بات صوبہKPKکو مسائل ستان بنا دیا ہے اور عمران خان نے صوبے کے عوام کو لا ورث چھوڑ کر وزیر اعظم بننے کا خواب دیکھ رہے ہیں MMAکے دور حکومت میں سوات کو بارد کا ڈھیر بنا دیا تھا ANPنے امن کے خا طر ووٹ لے کر امن بحا لی میں ہزاروں جانوں کے نظرانے پیش کی دہشت گردی کے دوران ہماری تعلیمی ادارے ،پل، سکول ، کالجز تباہ کی گئے تھے پھر سیلاب کے شکل میں کا فی نقصان کا سامنا کیا لیکن اس کے با و جود ہم نے پاکستان کے تا ریخ میں جو ترقیا تی کام کی ہے اس کا کوئی مثال نہیں تبدیلی کے دعویدار بتائے کہ چار سالوں میں کونسا تبدیلی لا ئے ہے انہوں نے کہا کہ پختون قوم کے مستقبل کو سازش کے تحت تعلیم سے محروم رکھا جا رہا ہے با چا خان نے جدوجہد کر کے انگریزوں کو بھگا دیا تھا اب عوام کے تمام نظریں ANPپر ہے اس موقع پر پاکستان مسلم لیگ اور پاکستان تحریک انصاف سے درجنوں افراد حا جی خان زرین ، خا ئستہ خان ، نصیب ، رحیم خان ، امیر عالم اور دیگر اپنے خاندانوں اور سا تھیوں سمیت مستعفی ہو کر عوامی نیشنل پارٹی میں شا مل ہو گئے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں