1,212

کٹ گاڑیوں کے حوالے سے MTAکو درخواست جمع کر دی ہے ،ابرا ر خان صدر آل بارگین ضلع سوات

کٹ گاڑیوں کے حوالے سے MTAکو درخواست جمع کر دی ہے ،ابرا ر خان صدر آل بارگین ضلع سوات
ڈیڈیک چیرمین فضل حکیم خان کیساتھ بھی ملاقات کی ہے جس میں انکو تما م مسائیل سے اگاہ کر دیا ہے ہم تو اول سے ہی کٹ گاڑیوں کے خلاف تھے جو سکریب سے بنتے ہیں،2005 میں افغانستان سے کٹ گاڑیاں بن کر یہاں اتی تھی وہ تمام گاڑیاں یہاں کے تھانوں میں رجسٹردڈ بھی ہیں،ایسے لوگوں کے پاس اس وقت کی کٹ گاڑیاں موجود ہیں اور باقاعدہ رجسٹرڈ ہیں،اب اس کو اونے پونے داموں تو نہیں بھیج سکتے اور نہ ہی سکریب کر سکتے ہیں اب چھوٹی سے گاڑی بھی دو لاکھ سے کم نہیں ملتی اور یہاں ذیادہ تر غریب لوگ ہیں جنہوں نے اپنی لئے کٹ گاڑیاں خریدی ہیں انکو کم از کم ریلف تو ملنا چاہئی،ہم نے ڈیڈیک چیرمین فضل حکیم خان کو یہ بھی اپیل کی کہ ہم قانون کا احترام کرتے ہیں پولیس صاحبان ورکشاپس میں اگر کٹ گاڑیوں کو ضبط کرنا چاہیں یا انٹری کرنا چاہیں تو ہمیں کوئی اعتراض نہیں مگر اہم درخواست کرتے ہیں کہ بارگینز میں یہ سلسلہ نہ کیا جائے اس سے ہمارے کاروبار متاثر ہو رہے ہیں،ہم تو کوشش کر رہے ہیں کہ کٹ گاڑیوں کو جلد از جلد فروخت کر کے ختم کریں اور ورکشاپس والے مذید گاڑیاں بنا کر مشکلات میں اضافہ کر رہے ہیں، آل بارگین ضلع سوات کے صدرابرا ر خان نے کہا کہ کٹ گاڑیوں پر باقاعدہ ڈیوٹی ٹیکس جمع کر دیا جاتا ہے تب ہی سوات پہنچتے ہیں یہ لیگل طریقے سے سوات میں ٹیکس دے کر آتے ہیں فرق صرف یہ ہے کہ یہ سکریب میں اتے ہیں اور ڈینٹرز وغیرہ اس سے کٹ گاڑیاں بناتے ہیں،اب میں سب کو اپیل کی صورت میں یہ بتانا اپنا فرض سمجھتا ہوں کہ مذید گاڑیاں نہ بنائیں ،انشاءاللہ اس سلسلے میں ہماری ر آل بارگین ضلع سوات کی تنظیم امیر مقام اور دیگر اعلی حکام سے رابطے کرینگے تاکہ اس کا مثبت اور پائیدار حل نکال سکیں۔ڈیڈیک چیرمین فضل حکیم خان کیساتھ ملاقات میں انہوں نے بھی کہا کہ میں ایک دو روز میں اس کا حل نکالنے کی بھر پور کوشش کرونگا جس پر ہم انکے مشکور ہیں۔بریکوٹ سے ظاہر شاہ کمال

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں