794

ہیلتھ پروفیشنل الاؤنس اور سروس سٹرکچر کی منظوری نہ ہوئی تو اگلے ہفتے احتجاجی تحریک کا آغاز کیا جائیگا

پراوینشل ڈاکٹرز ایسو سی ایشن خبیر پختونخوا کے صدر ڈاکٹر امیر تاج نے کہا ہے کہ ہیلتھ پروفیشنل الاؤنس اور سروس سٹرکچر کی منظوری نہ ہوئی تو اگلے ہفتے احتجاجی تحریک کا آغاز کیا جائیگا اور کسی بھی قربانی سے دریغ نہیں کریں گے ، ہسپتالوں میں سیاسی مداخلت برداشت نہیں ، سیاسی قائدین ووٹ بینک کیلئے ہسپتال کے بجائے گھروں محلوں پر توجہ دیں ، ان خیالات کا اظہار انہوں نے سیدو میڈیکل کالج میں پراوینشل ڈاکٹر زایسو سی ایشن ملاکنڈ ڈویژن کی تقریب حلف برداری سے خطاب کرتے ہوئے کیا ، تقریب سے سیدو میڈیکل کالج کے پرنسپل پروفیسر ڈاکٹر عمران الدین ، پروفیسر ڈاکٹر تاج محمد خان ، ضلعی صدر ڈاکٹر عبدالواسع نے بھی خطاب کیا ، انہوں نے کہا کہ ڈاکٹرز ہسپتالوں میں مریضوں کی بے لوث خدمت کررہے ہیں اور اس خدمت کو جاری رکھتے ہوئے آگے بڑھ رہے ہیں ، جن لوگوں کو ہسپتالوں کی تعمیر و ترقی پر توجہ دینی چاہیئے وہ ہسپتالوں کے دورے کرکے ڈاکٹرز برادری کے لیے مسائل پیداکررہے ہیں ، ہسپتال سیاست کی جگہ نہیں یہاں تو مریض آتے ہیں اور وہ توجہ چاہتے ہیں لہٰذا ہسپتالوں میں سیاست کرنے سے دریغ کیا جائے ، انہوں نے کہا کہ ڈاکٹروں کو انکا جائز مقام دینے کیلئے ہماری عملی کوششیں جاری ہیں ، انہوں نے کہا کہ ہمارا پیشہ ایک مقدس پیشہ ہے اس لئے ڈاکٹر برادری دکھی انسانیت کی خدمت اپنا شعار بنائیں، اس موقع پر ملاکنڈ ڈویژن کے نئی کابینہ صدر اسسٹنٹ پروفیسر ڈاکٹر نعیم اللہ ، ڈاکٹر عمر حبیب جنرل سیکرٹری ، ڈاکٹر بخت زادہ سینئر نائب صدر ، ڈاکٹر حیات شہزادہ نائب صدر ، ڈاکٹر فاروق فنانس سیکرٹری ، ڈاکٹر ہمایوں لیگل سیکرٹری ، ڈاکٹر منصور کوارڈی نیٹر سیکرٹری ، ڈاکٹر وقار سیکرٹری اطلاعات ، ڈاکٹر خضر حیات جائنٹ سیکرٹری ، ڈاکٹر محسن ڈپٹی جائنٹ سیکرٹری ، ڈاکٹر رفیع اللہ آفس سیکرٹری اور ضلع ملاکنڈ اور تحصیل مٹہ پی ڈی اے کے نومنتخب عہدیداروں سے حلف لیا گیا ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں