18

آج پینڈورا لیکس پر کہاں ہے جے آئی ٹی، سپریم کورٹ کا پاناما بینچ اور نیب؟ مریم نواز

اسلام آباد:  نائب صدر مریم نواز نے سوال اٹھایا ہے کہ آج پینڈورا لیکس پر کہاں ہے جے آئی ٹی، پاناما بنچ اور نیب۔

اسلام آباد ہائیکورٹ میں پیشی کے بعد مریم نواز نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ میراکیس پولیٹکل انجینئرڈ ہے، نواز شریف کو

مریم نواز نے کہا کہ میڈیا پر آج بہت زیادہ پابندی ہے، کچھ لوگوں نے پریس میں لکھا ہے کہ مریم نے ادارے پر حملہ کیا ہے، ملک کی مسلح افواج اور ادارے کسی بھی تنازع اور شک و شبہ سے بالاتر ہونی چاہئیں، ذاتی مقاصد کے لیے کسی ایک فرد کی اطاعت کو ادارے کا نام نہیں دینا چاہیے، ادارہ ملک کا ہوتا ہے، فرد واحد کا نہیں، لیکن جب فرد واحد ادارے کے پیچھے چھپنے کی کوشش کرے تو اس کے

مریم نواز کا کہنا تھا کہ میں سوال اٹھاتی ہوں کہ جب جرنیل عہدے کا غلط استعمال کرتا ہے تو کیا وہ ادارے کے وقار میں اضا کررہا ہے؟، یہ میرا ذاتی نہیں بلکہ عدلیہ کا بھی مقدمہ ہے جس عدلیہ کو یہ داغدار کرتے ہیں، چیف جسٹس ثاقب نثار سے دباؤ میں فیصلے لیے گئے، انہوں نے عدلیہ کا تقدس پامال کیا، ان سے نواز شریف سے ذاتی رنجش کی بو آتی تھی، یہ عدلیہ کا بھی امتحان ہے، کیا وہ چاہتی ہے کہ اسی طرح اس سے دباؤ میں فیصلے لیے جاتے رہیں، سپریم کورٹ کے ججز نے بھی اپنی میٹنگ میں تشویش کا اظہار کیا کہ یہ تاثر زور پکڑ رہا ہے کہ ججز سے دباؤ میں فیصلے لیے جاتے ہیں۔

مریم نواز نے کہا کہ موجودہ حکومت اور ہماری حکومت کا موازنہ کریں تو لگتا ہے ملک کسی جنگ سے گزر کر آیا ہے، ترقی کرتا پاکستان تنزلی کرتا پاکستان ہے، آج پاکستان ملک کے اندر مہنگائی اور باہر تنہائی رسوائی کا شکار ہے، پینڈورا لیکس اور اسکینڈلز سامنے آرہے ہیں، کہاں ہے جے آئی ٹی اور کہاں ہے درخواست گزار جو پاناما کو لے کر عدالت گیا تھا، قوم اس درخواست گزار کو اور چیف جسٹس کھوسہ کو بھی ڈھونڈ رہی ہے جنہوں نے عمران خان کو کہا تھا کہ لائیں درخواست میرے پاس، کیونکہ فیصلہ تو پہلے ہی ہوچکا تھا، کہاں ہے جے آئی ٹی جسے ریٹائرڈ برگیڈیئر چلاتا تھا، میں اس کی گواہ ہوں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں